ہوم / بین الاقوامی / ارب پتی تاجر مائیکل بلوم برگ امریکہ کے صدر بننا چاہتے ہیں

ارب پتی تاجر مائیکل بلوم برگ امریکہ کے صدر بننا چاہتے ہیں

77 سالہ امریکہ کے ارب پتی تاجر مائیکل بلوم برگ امریکہ کے صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹ پارٹی کے امیدوار بننے کی کوشش کر رہے ہیں۔بلومبرگ کے ایڈوائزر کہتے ہیں کہ مائیکل سمجھتے ہیں 2020 کے انتخابات کیلئے ڈیموکریٹس کے پاس ڈونلڈ ٹرمپ کا مقابلہ کرنے کیلئے فی الحال کوئی تگڑا امیدوار نہیں ہے۔ ڈیموکریٹ پارٹی کو اس وقت تک 17 امیدواروں نے اپنے کاغذات جمع کروا دیئے ہیں۔سابق امریکی نائب صدر جو بائیڈن، میساچوٹس سے سینیٹر ایلزبتھ ویرن اور ورمونٹ سے سینیٹر برنی سینڈرز بھی صدارتی دوڑ میں شامل ہیں۔ تجزیہ کار سمجھتے ہیں کہ مس ویرن اور مسٹر سینڈرز میں سے اگر کوئی بھی ڈونلڈ ٹرمپ کے مقابل آیا تو ڈیموکریٹ پارٹی یہ الیکشن ہار جائے گی۔ ری پبلکن پارٹی میں بھی تین امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کی جگہ لینے کیلئے کمر کس رہے ہیں۔ مائیکل بلوم برگ اب تک ڈیموکریٹ پارٹی میں امریکی صدارتی دوڑ کے سب سے زیادہ طاقتور امیدوار کے طور پر سامنے آئے ہیں۔ وہ تین بار مسلسل نیویارک کے میئر رہے۔ ان کی دولت کا تخمینہ 52 ارب ڈالر لگایا گیا ہے جو دونلڈ ٹرمپ کے مقابلے میں 17 گنا زیادہ ہے۔ بلوم برگ وال اسٹریٹ کے سابق بینکر ہیں۔ انہوں نے اپنے نام سے ایک پبلشنگ ایمپائر قائم کی ہے۔

یہ بھی چیک کریں

پاکستان اور سری لنکا کے درمیان پہلا ٹیسٹ ڈرا ہونے کے قوی امکانات

پاکستان اور سری لنکا کے درمیان راولپنڈی کے انٹرنیشنل اسٹیڈیم میں کھیلے جانے والا ٹیست …

وزیراعظم کی شاندار تقریرکے بعد طیب اردگان نے انکا بوسہ لے لیا، ویڈیو سوشل میڈیا پروائرل

لاہور… وزیراعظم پاکستان عمران خان کی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں کی …

امریکی کانگریس میں بھارتی کاکس کے چئیرمین کا مودی کے استقبالیہ میں جانے سے انکار ، پاکستانی کاکس کی چئیرپرسن استقبال کرنے والوں میں شامل ، استقبالیہ سے ٹرمپ بھی خطاب کریں گے

رپورٹ آفاق فاروقی کیلی فورنیا … ڈیموریٹک کانگریس مین اور کانگریس میں ساؤتھ ایشیا امور …

ریوبک کیوب سے بنی مونا لیزا کی تصویر 5 لاکھ یورو میں فروخت

فرانس: مونا لیزا کی تصویر ایک جانب تو عظیم تخلیقی شاہکار ہے تو دوسری جانب اسے …

کیلی فورنیا میں ہزاروں قاتل مکھیوں کا خطرناک حملہ

کیلیفورنیا: گزشتہ ہفتے امریکا میں شہد کی ہزاروں مکھیوں نے اچانک ایک علاقے میں حملہ کردیا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے