ہوم / بین الاقوامی / مسئلہ فلسطین حل کیے بغیر مشرق وسطیٰ میں امن بارے سوچنا غلطی ہو گی: روس

مسئلہ فلسطین حل کیے بغیر مشرق وسطیٰ میں امن بارے سوچنا غلطی ہو گی: روس

روس نے کہا ہے کہ فلسطین کا مسئلہ حل کیے بغیر مشرق وسطیٰ میں امن کے بارے میں سوچنا ‘غلطی’ ہوگی۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق روسی وزارتِ خارجہ سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ اسرائیل کے عرب ملکوں سے تعلقات معمول پر آنے کو دیکھا ہے تاہم فلسطین کا مسئلہ اب بھی اہم ہے۔

روس کی وزارت خارجہ نے یہ بیان وائٹ ہاؤس میں اسرائیل کے بحرین اور متحدہ عرب امارات کے ساتھ تعلقات معمول پر آنے کے معاہدے پر دستخط کے بعد جاری کیا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ یہ سوچنا ایک غلطی ہوگی کہ فلسطین کے مسئلے کا حل تلاش کیے بغیر مشرقِ وسطیٰ میں دیرپا استحکام حاصل کیا جاسکتا ہے۔

وزارت داخلہ کا مزید کہنا تھا کہ روس نے خطے میں اور دیگر ممالک پر زور دیا کہ وہ اس مسئلے کے حل کے لیے مربوط کوششوں کو بڑھائیں۔ روس اس طرح کے مشترکہ کام کے لیے تیار ہے۔

واضح رہے کہ بحرین اور متحدہ عرب امارت نے رواں ہفتے اسرائیل سے سفارتی تعلقات بحال کیے ہیں۔ قبل ازیں 1979 میں مصر اور 1994 میں اردن نے اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کیے تھے۔

یہ بھی چیک کریں

روس میں کورونا وائرس اسپتال میں آتشزدگی سے 5 مریض ہلاک

ماسکو: روس میں کورونا وائرس کے لیے مخصوص اسپتال میں اچانک آگ بھڑک اُٹھی جس کے …

روسی وزیراعظم بھی کورونا وائرس میں مبتلا

ماسکو: روس کے وزیراعظم میخائل مشسٹن بھی کورونا وائرس میں مبتلا ہوگئے۔ غیر ملکی خبر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے