ہوم / بین الاقوامی / مائیکرو سافٹ کے بھارتی نژاد سی ای او بھی مودی حکومت کے شہریت کے متنازعہ قانون کے مخالف

مائیکرو سافٹ کے بھارتی نژاد سی ای او بھی مودی حکومت کے شہریت کے متنازعہ قانون کے مخالف

دنیا میں سوفٹ ویئر کی سب سے بڑی امریکی کمپنی مائیکرو سوفٹ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر بھارتی نژاد ستیا نڈیلا نے مودی حکومت کے شہریت کے متنازعہ قانون پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ بھارت میں شہریت کے متنازعہ قانون پر انہیں افسوس ہے اور جو کچھ اس وقت بھارت میں ہو رہا ہے وہ اس پر افسردہ ہیں۔ نیویارک میں مائیکرو سافٹ کی ایک تقریب کے موقع پر صحافیوں سے بات کرتے ہوئے ستیا نڈیلا نے کہا کہ جو لوگ بھارت میں پیدا ہوئے اور وہیں پَل بڑھ کر جوان ہوئے اب انہیں اپنی شہریت ثابت کرنے کو کہا جا رہا ہے جو ایک افسوسناک بات ہے۔ انہوں نے کہا کہ جو بنگلہ دیشی بھارت آئے ہیں اور انہوں نے یہاں یونی کورن کی بنیاد رکھی مجھے توقع ہے کہ کل کو ان میں سے کوئی ایک انفوسِس کا سی ای او بنے گا لیکن مودی حکومت نے شہریت کا جو متنازعہ قانون بنایا ہے اس پر انہیں دُکھ ہے۔ ستیا نڈیلا کا تعلق بھارتی شہر حیدرآباد سے ہے لیکن اب وہ ایک امریکی شہری ہیں۔ ستیا نڈیلا کے اس بیان کے فوری بعد مائیکرو سوفٹ انڈیا نے ایک بیان جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ایک تارکین وطن بھارت میں اپنی ایک خوشحال زندگی شروع کر سکتا ہے لیکن ہر ملک کو اپنی سرحدوں کے تعین اور ملکی سیکیورٹی کا تحفظ کرنا ہوتا ہے۔ ہر ملک اپنی امیگریشن پالیسی کیلئے آزاد ہے۔ ہر جمہوری ملک کو اپنے لوگوں کے تحفظ کیلئے کچھ اقدامات کرنا ہوتے ہیں۔ مجھے اپنے کثیرالثقافتی بھارت سے محبت ہے اور یہاں امریکہ کی امیگریشن پالیسی پر فخر ہے۔

واضح رہے کہ مودی حکومت نے شہریت کا ایک متنازعہ قانون 10 جنوری سے نافذ کر دیا ہے جس میں سوائے مسلمانوں کے باقی تمام غیر مسلموں کو شہریت دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ مودی حکومت کے اس فیصلے پر پورے بھارت میں احتجاج اور مظاہرے جاری ہیں اور اسے مسلمانوں کے خلاف ایک امتیازی قانون قرار دیا گیا ہے۔

یہ بھی چیک کریں

دہلی پولیس نے انتہاپسند ہندووں کے ساتھ مل کر مسلمانوں کا قتل عام کیا، نیویارک ٹائمز کی رپورٹ

امریکہ کے معتبر روزنامہ اخبار دی نیویارک ٹائمز نے اپنی ایک رپورٹ میں کہا ہے …

مودی بھارت کیلئے عالمی سطح پر بدنامی کا بڑا بدنما داغ بن گیا ہے، عالمی میڈیا کی رپورٹس

اقتدار میں آنے سے پہلے نریندر مودی نے بھارتیوں سے وعدہ کیا تھا کہ وہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے